کمشنر ساہیوال علی بہادر قاضی کی صدارت میں کھاد اور اشیائے ضروریہ کی قیمتوں کے حوالے سے جائزہ اجلاس

You are currently viewing کمشنر ساہیوال علی بہادر قاضی کی صدارت میں کھاد اور اشیائے ضروریہ کی قیمتوں کے حوالے سے جائزہ اجلاس

ساہیوال :کمشنر ساہیوال ڈویژن علی بہادر قاضی نے کہا ہے کہ پنجاب حکومت کسانوں کو کھاد کی مسلسل فراہمی یقینی بنانے کے لئے تمام ضروری اقدامات اٹھا رہی ہے اور ساہیوال ڈویژن کے کاشتکاروں کو درکار نومبر اور دسمبر کی کھاد کی ضروریات کو پورا کیا جائے گا۔ اس وقت ڈویژن بھر میں کہیں بھی یوریا کھاد کی کوئی قلت نہیں اور تمام ڈیلرز کے پاس کھاد وافر موجود ہے۔ انہوں نے یہ بات اپنے دفتر میں ہونے والے اجلاس میں کہی جس میں کھاد کی دستیابی، دیہی مراکز مال کی کارکردگی اور ضروری اشیاء صرف کی قیمتوں کا تفصیلی جائزہ لیا گیا۔ اجلاس میں ایڈیشنل کمشنر کوارڈینشن شفیق احمد ڈوگر سمیت تینوں اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز، ایڈیشنل کمشنرز ریونیو اور اسسٹنٹ کمشنرز نے شرکت کی۔ اجلاس میں بتایا گیا کہ کسانوں کو کھاد کی دستیابی یقینی بنانے کے لئے 13نومبر سے ڈیلرز کی سٹاک چیکنگ کا عمل جاری ہے اور اب تک ساہیوال ڈویژن میں 652انسپکشنز کی گئیں جن میں سٹاک ڈیکلیر نہ کرنے پر 35مقدمات درج کروائے گئے اور 2افراد کو گرفتار کیا گیا۔ اس کے علاوہ 10لاکھ 72ہزار روپے جرمانہ بھی عائد کیا گیا جن میں 4لاکھ 47ہزار روپے ضلع ساہیوال، 3لاکھ81ہزار ضلع اوکاڑہ اور 2لاکھ51ہزار روپے ضلع پاک پتن میں کیے گئے۔ کمشنر علی بہادر قاضی نے ڈائریکٹر زراعت کو ہدایت کی کہ تمام ڈیلرز کی مانیٹرنگ کے لئے آفیسرز تعینات کئے جائیں اور کھاد کی آئندہ کی ضروریا ت پوری کرنے کے لئے ابھی سے صوبائی حکومت کو آگاہ کیا جائے تاکہ ملوں سے رابطہ کر کے بروقت کھاد کی دستیابی یقینی بنائی جا سکے۔ اجلاس میں ڈویژن میں قائم دیہی مراکز مال کی کارکردگی اور ڈیجیٹل گرداوری کے کام کا بھی تفصیلی جائزہ لیا گیااور کمشنر علی بہادر قاضی نے تینوں ڈپٹی کمشنرز کو ہدایت کی کہ اس ماہ کے آخر تک ڈیجیٹل گرداوری کا 60فی صد کام مکمل کیا جائے۔ ایڈیشنل کمشنر کوارڈینیشن شفیق احمد ڈوگر نے بتایا کہ ساہیوال ڈویژن میں 56دیہی مراکز مال قائم کئے جا چکے ہیں جن میں 15ضلع ساہیوال، 25ضلع اوکاڑہ اور 16ضلع پاک پتن میں ہیں جن سے عوام کے ریونیو سے متعلقہ مسائل میں بڑی حد تک کمی واقع ہوئی ہے اور انہیں فرد کا حصول آسان بنا دیا گیا ہے۔ اجلاس میں روزمرہ اشیاء صرف کی قیمتوں کا بھی تفصیلی جائزہ لیا گیااور بتایا گیا کہ پچھلے ہفتے کے دوران ٹماٹر، پیاز اور آلو کے علاوہ چینی کے نرخوں میں بھی کمی آئی ہے جس پر کمشنر علی بہادر قاضی نے اطمینان کا اظہار کیا اور ہدایت کی کہ ان ضروری اشیاء صرف کی طلب و رسد میں توازن کو ہر صورت یقینی بنایا جائے۔ انہوں نے فروٹ اور سبزی منڈیوں میں نیلامی کے عمل کی مانیٹرنگ جاری رکھنے اور سپلائی کو بہتر بنانے کے لئے اقدامات میں تسلسل برقرار رکھنے کی بھی ہدایت کی۔

This Post Has 2 Comments

Leave a Reply