ابتداء ھے رب جلیل کے بابرکت نام سے جو کل کائناتوں کا اکیلا مالک ہے۔ اور اربوں کھربوں دارود و سلام محمد صلی اللہ علیہ وسلم کی ذات پاک پر اور آپ کی آل پر          

کمشنر ساہیوال کی صدارت میں گندم خریداری مہم کے حوالے سے جائزہ اجلاس

کمشنر ساہیوال کی صدارت میں گندم خریداری مہم کے حوالے سے جائزہ اجلاس

ساہیوال :کمشنر ساہیوال ڈویژن محمد احسن وحید نے کہا ہے کہ صوبائی حکومت عوام کو سارا سال سستا آٹا فراہم کرنے اور فوڈ سکیورٹی کو یقینی بنانے کے لئے گندم کی ذخیرہ اندوزی کی قطعا اجازت نہیں دے گی۔ ایسے تمام عناصر کے خلاف سخت کارروائی جاری ہے جنہوں نے ضرورت سے زائد گندم ذخیرہ کر رکھی ہے۔ انتظامیہ خریداری ہدف کے پورا ہونے تک کسانوں سے گندم خریدنے کا عمل جاری رکھے گی۔ انہوں نے یہ بات اپنے دفتر میں گندم خریداری مہم کے جائزہ اجلاس میں کہی جس میں ساہیوال ڈویژن میں جاری مہم کا تفصیلی جائزہ لیا گیا -اجلاس میں آر پی او ہمایوں بشیر تارڑاور ڈپٹی ڈائریکٹر فوڈ حافظ سلیمان تنویر کے علاوہ تمام ڈپٹی کمشنرز نے بھی شرکت کی -اجلاس میں بتایا گیا کہ ڈویژن بھر میں گندم خریداری کے لئے مختص ہدف 4لاکھ 18ہزار میٹرک ٹن میں سے 20مئی تک 3لاکھ 13ہزار8سو میٹرک ٹن گندم خریدی جا چکی ہے جو کل ہدف کا 75فیصد ہے ان میں ضلع ساہیوال کے ہدف ایک لاکھ 60ہزار کے مقابلے میں ایک لاکھ11ہزار 9سو میٹرک ٹن،ضلع اوکاڑہ کے ایک لاکھ 69ہزار کے مقابلے میں ایک لاکھ 42ہزار 5سو اور ضلع پاکپتن کے 88ہزار 8سو میٹرک ٹن ہدف کے مقابلے میں 59ہزار 4سو میٹرک ٹن خریدی گئی ہے -کمشنر محمد احسن وحید نے تمام ڈپٹی کمشنرز کو ہدایت کی کہ وہ گندم کی ذخیرہ اندوزی میں ملوث افراد کے خلاف کارروائیاں تیز کریں اور اس سلسلے میں تمام متعلقہ محکمے مربوط حکمت عملی وضع کریں تا کہ عوام کو مہنگے داموں آٹا فروخت کرنے والے مافیا کا خاتمہ ہو سکے -ڈپٹی کمشنرز نے اجلاس میں بتایا کہ ضلعی انتظامیہ گندم کی ذخیرہ اندوزی سے متعلقہ موصول ہونے والی اطلاعات پر فوری کارروائی کرتی ہے اور اب تک محکمہ فوڈ اور پولیس کے تعاون سے ذخیرہ اندوزوں کے خلاف 35مقدمات بھی درج کروائے جا چکے ہیں جن میں 7مقدمات ضلع ساہیوال،15ضلع اوکاڑہ اور 13ضلع پاکپتن میں درج کئے گئے ہیں اور503میٹرک ٹن گندم قبضے میں لی گئی -ڈپٹی ڈائریکٹر فوڈ حافظ سلیمان تنویر نے اجلاس میں بتایا کہ ساہیوا ل ڈویژن میں اب تک ذخیرہ اندوزوں سے 9881میٹرک ٹن گندم بر آمد کی گئی ہے جن میں ضلع ساہیوال سے 3705میٹرک ٹن،3206ضلع اوکاڑہ اور ضلع پاکپتن سے 2969 میڑک ٹن گندم قبضے میں لی گئی ہے –

Leave a Reply

Close Menu